حرم کے مسافر بنے ہو اے حاجی | حج پر اشعار

Hajj poetry in urdu

2 113

حرم کے مسافر بنے ہو اے حاجی
کہ یاد حرم میں سجے ہو اے حاجی
مرا دل ہوا ہے یہ مغموم اب تو
بھلے تم بہت ہی لگے ہو اے حاجی

 

ہمیں بھی دعاؤں میں تم یاد رکھنا
اٹھانا وہاں ہاتھ تب یاد رکھنا
نظر جب پڑے کعبے پر یاد رکھنا
خدا کے حرم اب چلے ہو اے حاجی

 

ہمارا سلام محبت سنانا
گزارش ہے نعتیں ہماری سنانا
یوں روتے ہوئے حال امت سنانا
نبی کے حرم بھی چلے ہو اے حاجی

 

ہمیں تو حرم کی بہت یاد آئی
وہ شام و سحر بھی بہت یاد آئی
حرم کی فضا بھی بہت یاد آئی
گلے سے مجھے جب ملے ہو اے حاجی

 

حرم میں دعا یہ مرے حق میں کرنا
گزارش ہے میری کہ سستی نہ کرنا
نظر پہلی کعبے کو دیکھو تو کرنا
نصیب اب سفر پھر مجھے ہو اے حاجی

 

یوں اظہر کو شامل دعاؤں میں رکھنا
حرم میں جو مانگو صداؤں میں رکھنا
وہ پرکیف سب ہی نداؤں میں رکھنا
جدا ہم سے ہونے لگے ہو اے حاجی

 

حرم کے مسافر بنے ہو اے حاجی
کہ یاد حرم میں سجے ہو اے حاجی
مرا دل ہوا ہے یہ مغموم اب تو
بھلے تم بہت ہی لگے ہو اے حاجی

 

شاعری: ڈاکٹر محمد اظہر خالد

اگر آپ مزید مناجات، حمدیہ اشعار، نعت شریف یا  شان صحابہ پر کلام پڑھنا چاہتے ہیں تو یہ لازمی دیکھیں

2 تبصرے
  1. sklep internetowy کہتے ہیں

    You are really a excellent webmaster. This
    website loading speed is amazing. It seems that you are doing any unique trick.

    Moreover, the contents are masterwork. you’ve done a fantastic process on this
    subject! Similar here: tani sklep and also here: Najlepszy sklep

  2. Autumn کہتے ہیں

    Wow, incredible blog structure! How long have you ever been running a blog for?
    you made blogging look easy. The whole look of your web site
    is wonderful, let alone the content material! You can see similar here
    sklep internetowy

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.