سجدے میں سکوں سجدے میں مزہ|سجدوں پر اشعار

urdu poetry

1 26

سجدے میں سکوں سجدے میں مزہ
سجدے میں چھپا انداز وفا
محروم رضائے مولا سے
سجدے سے جو سر محروم ہوا

سجدوں سے محبت ملتی ہے
سجدوں سے سعادت ملتی ہے
سجدوں پہ سجدے کرتا جا
سجدوں میں چھپی ہر غم کی دوا

قسمت کو بلندی مِل جائے
سجدوں کی جانب جو آئے
حالات کا شکوہ مت کرنا
توفیقِ سجدہ مانگ ذرا

لوگوں سے توجّہ ہٹ جائے
دنیا سے رشتہ کٹ جائے
ماتھے کو زمیں پر رکھنا ہے
مصروف زباں ہو حمد و ثناء

سجدے میں شکرِ مولا ہے
سجدے میں ذکرِ مولا ہے
توبہ کرکے مانگو اک دن
رد ہوتی نہیں سجدے کی دعا

مومن بن کر دنیا میں رہو
داعی بن کر لوگوں سے کہو
اخلاص و یقیں کا اک سجدہ
ہر غم سے نکلنے کا نسخہ

سجدے میں سکوں سجدے میں مزہ
سجدے میں چھپا انداز وفا
محروم رضائے مولا سے
سجدے سے جو سر محروم ہوا

شاعری :زرینہ زرین

اگر آپ اداس شاعری پڑھنا چاہتے ہیں تو یہ لازمی دیکھیں 

غم زندگی اب خوشی چاہتا ہے تعفّن میں پاکیزگی چاہتا ہے | خوبصورت اردو شاعری

1 تبصرہ
  1. […] سجدے میں سکوں سجدے میں مزہ|سجدوں پر اشعار […]

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.