براؤزنگ ٹیگ

اداسی پر اشعار

سہمے سہمے ڈرے ڈرے پودے | پودے پر شاعری

سہمے سہمے ڈرے ڈرے پودے کیوں ہیں آخر ہرے بھرے پودے باغباں ! تم ہمیں بتاؤ گے وقت سے پہلے کیوں مرے پودے کچھ بتا کس لیے پریشاں ہے تیرا ہمدرد ہوں ارے پودے انکا کہنا ہے ہم نہیں قاتل خودمرے ہیں دھرے دھرے پودے ہم درختوں کو شرم ساری ہو ایسا…

اس کا اک اذن ملے میرا گلا کھُل جاۓ | اداس اردو شاعری

اس کا اک اذن ملے میرا گلا کھُل جاۓ کھُل جا سِم سِم وہ کہے اور صدا کھُل جاۓ ہم سے ملنے میں نہ اتنی بھی خرد مندی دکھا راز اتنا بھی نہ دنیا سے چھپا کھُل جاۓ پھر محبت کی حقیقت کو جہاں سمجھے گا سب کی آنکھوں پہ کسی روز خدا کھُل جاۓ اک…

دلوں کو لگے روگ جاتے نہیں ہیں | محبت پر اردو اشعار

دلوں کو لگے روگ جاتے نہیں ہیں کسی دل جلے کو ستاتے نہیں ہیں محبت میں وحدت کو جومانتے ہیں وہ ہراک کو اپنا بناتے نہیں ہیں ۔ محبت میں ہارےہوئےکو مری جاں کسی بات میں آزماتے نہیں ہیں۔ جورآضی خدا کی رضاپرہوئےہوں وہ لوگوں…

زندگی میں اب اُجالے ہی نہیں ھیں ہمنوا | اداس اردو شاعری

زندگی میں اب اُجالے ہی نہیں ھیں ہمنوا ظلمتیں ھی ظلمتیں پھیلی ہوئی ہیں ہرجگہ آڑے آتا ھی نہیں مشکل گھڑی میں کوئی بھی دوستی ہے مطلبی، رشتے ہیں سارے بے وفا ھے بظاہر پارسائی ، نیتوں میں کھوٹ ھے ظالموں نے اوڑھ…

بدلتے موسموں کا نام ہی تو زندگانی ہے | غمگین زندگی پر اشعار

بدلتے موسموں کا نام ہی تو زندگانی ہے..! ہر اک انساں کی کوئی نا کوئی غمگیں کہانی ہے..! رہِ اہلِ وفا پر چل رہے ہیں سوئے منزل ہم.! تبھی درپیش آفت ہر قدم پر ناگُہانی ہے..! وہ ایسے عقل کے مارے ہیں اُن کے ناخداؤں…

بھلا بتاؤ بھی کیا ہوا ہے جو اتنا غم سے نڈھال ہو تم|اردو شاعری

بھلا بتاؤ بھی کیا ہوا ہے جو اتنا غم سے نڈھال ہو تم ہمارے دل کو جلا کے آنسو بہا رہے ہو کمال ہو تم وہ شمَّع جلتی کہ اُس کا ہم سے رویہ اتنا عجیب سا تھا فضا سے بولی کہ تو ہے رحمت کہا پَتِنگو ! وبال ہو تم قیام تم نے کیا ہے جب سے اے دل کے…

تُو یہ مت سوچ کیسا سوچتا ہوں|سوچ پر اشعار

تُو یہ مت سوچ کیسا سوچتا ہوں ترے بارے میں اچھا سوچتا ہوں مہک جاتی ہیں میری ساری سوچیں میں تجھ کو جب بھی اپنا سوچتا ہوں مری بینائی گھٹتی جا رہی ہے کوئی بھیجے گا کرتہ سوچتا ہوں مکمل ہو کے خود آتا ہے مجھ پر میں بس مصرعے کو آدھا…

دربدر ڈھونڈا تجھے اے ہمسفر جانے کے بعد | غمگین اردو شاعری

دربدر ڈھونڈا تجھے اے ہمسفر جانے کے بعد زندگانی مشکلوں میں کی بسر جانے کے بعد خوف ہے اس بات کا مجھ کو فقط میرے عزیز کھو نہ جاۓ عصمتِ دستار سَر جانے کے بعد گاڑ دے جیسے شکنجے موت آدم ذات پر رات یوں قابض ہے امیدِ سحر جانے بعد کاش…

ہوئی ہم کو غلط فہمی بھروسہ تجھ پہ کر بیٹھے | اداس شاعری

ہوئی ہم کو غلط فہمی بھروسہ تجھ پہ کر بیٹھے فدا ایسے ہوئے تجھ پہ کہ یاراں ہم تو مر بیٹھے ملا جب سے ترا یہ آستاں ہم کو جبھی سے ہم جھکائے اپنے ماتھے کو تری دہلیز پر بیٹھے خبر پہلے سے تھی کہ تو ہمیں بے جان کر دے گا ہمیشہ جان جانے…

اک مسلسل سے امتحان میں ہوں | اداس شاعری

اک مسلسل سے امتحان میں ہوں وہ سمجھتے ہیں آن بان میں ہوں خودکشی کب کا کر گیا ہوتا آیتِ صبر کی امان میں ہوں جسم سارا جھلس گیا میرا کس قسم کے یہ ساٸبان میں ہوں چار دن میں اترنے والی نہیں سالہا سال کی تھکان میں ہوں مجھ کو…