براؤزنگ ٹیگ

urdu poetry on dua

راحتیں دیجیے نعمتیں دیجیے اے خدا رزق میں برکتیں دیجیے | دعائیہ اردو کلام

راحتیں دیجیے نعمتیں دیجیے اے خدا رزق میں برکتیں دیجیے خالقِ دو جہاں مالکِ دوجہاں رازقِ دو جہاں وسعتیں دیجیے زندگی کا سفر عافیت سے کٹے شاہِ ابرار کی سنتیں دیجیے میرے کشکول میں عافیت ڈال کر مجھکو دونوں جہاں رفعتیں دیجیے سامنے…

اے خدا زندگی سہوں کیسے ؟! اک خلا ہے اسے بھروں کیسے ؟ | دعائیہ اردو شاعری

اے خدا زندگی سہوں کیسے ؟! اک خلا ہے اسے بھروں کیسے ؟ اے خدا اس عجیب دنیا میں تو بتا تو سہی جیوں کیسے میرے پیارے خدا مری توبہ خود کشی سے مگر بچوں کیسے ہیں مقابل مِرے ، مِرے اپنے اے خدا ان سے اب لڑوں کیسے ؟! میرے اپنوں نے…

شکستہ حالت ہوں دل ہے غمگیں ہر ایک غم سے رہائی دے دے |دعائیہ کلام

شکستہ حالت ہوں دل ہے غمگیں ہر ایک غم سے رہائی دےدے جھکیں فقط تیرے در الہی مجھے تو اپنی گدائی دے دے ضلالت و گمرہی میں ہوں اب جہاں سے مغموم میں کھڑا ہوں سکوں ملے مجھ کو جس طرف سے اسی طرف رہنمائی دے دے ٔ تیرے حرم کے قریب جاؤں تیرے کرم…

غرض جس کا مقاصد پہ آ کر رکے ۔۔۔اس رفاقت سے مجھ کو پناہ چاہئے|دعا اردو شاعری

غرض جس کا مقاصد پہ آ کر رکے اس رفاقت سے مجھ کو پناہ چاہئے جس محبت سے دل کو جراحت ملے اس محبت سے مجھ کو پناہ چاہئے دل پہ دستک غموں کی رہے عمربھر ایسی الفت سے مجھ کو پناہ چاہئے زیست ہر لمحہ خوشیوں کو تکتی رہے ایسی چاہت سے…

کہکشاؤں کے خدا سن لے میری سرگوشیاں | غمگین دل کی دعائیہ شاعری

کہکشاؤں کے خدا سن لے میری سرگوشیاں اشک و خوں سے بھر چکا امت کا ورق داستاں پنجہ اغیار میں اپنوں کے ہیں قلب و جگر نہ کوئی ہمدرد آیا نہ ہی کوئی چارہ گر ہو رہے محروم چادر سے ِادھر بہنوں کے سر کٹ رہے ہیں اُس طرف معصوم ماؤں کے…

میں کرتا ہوں توبہ اے میرے خدایا، میں پھر لوٹ آیا | دعائیہ اردو شاعری

میں کرتا ہوں توبہ اے میرے خدایا، میں پھر لوٹ آیا تجھے جب سے چھوڑا جہاں نے رلایا، میں پھر لوٹ آیا ترے در پہ حاضر پریشاں کھڑا ہوں بہت غمزدہ ہوں یہ در ترک کرکے سکوں ہی نہ پایا، میں پھر لوٹ آیا گناہوں میں ڈوبی مری زندگانی، ہے اتنی کہانی…

شکستہ دل ہوں میرے الہی تو اپنے در کی گدائی دے دے | رب سے دعائیں التجائیں

شکستہ دل ہوں میرے الہی تو اپنے در کی گدائی دے دے ہے التجا تیرے در الہی تو اپنے در کی رسائی دے دے معاصیت کےبھنور میں مولی پھنسا ہوا ہوں,  دھنسا ہوا ہوں گناہوں کی اس جکڑ سےمولی مجھے فقط تو رہائی دے دے ہے چاہتوں کا بسیرا ہرسو, یہ زیست…