براؤزنگ ٹیگ

حیات عبداللہ

دشتِ فرقت میں گر چلو گے الگ۔۔۔ شعر ایسے ہی کچھ کہو گے الگ

دشتِ فرقت میں گر چلو گے الگ شعر ایسے ہی کچھ کہو گے الگ شدتِ عشق سے یہ لگتا ہے جب کبھی تم مرے، مرو گے الگ بات اک خاص کرنی ہے تم سے شرط یہ ہے کہ تم ملو گے الگ ایک بار اُس کو چھو کے دیکھو تو ساری دنیا سے تم لگو گے الگ ایک عشرہ…

آفتابِ مبیں محمد ہیں ماہ تابِ حَسیں محمد ہیں | نعت رسول مقبول

آفتابِ مبیں محمد ہیں ماہ تابِ حَسیں محمد ہیں وہ کسی اور کے نہیں طالب دل میں جن کے مکیں محمد ہیں اسوہ جن کا نجات کا باعث وہ کوئی اور نہیں محمد ہیں دل کو دل سے ملانے آپ آئے دل ربا دل نشیں محمد ہیں زندگی کیوں نہ ہو نثار ان پر…