براؤزنگ ٹیگ

best urdu ghazal

ہِجر ہے باعثِ آزار نہیں جانتے تھے | غمگین اردو شاعری

ہِجر ہے باعثِ آزار نہیں جانتے تھے بچپنا ٹھیک تھا جب پیار نہیں جانتے تھے مُجھ کو اک بِھیڑ میسر تھی مگر تنہا تھا اور یہ بات مرے یار نہیں جانتے تھے کوئی اپنا تھا جو ہر بات بتاتا تھا اُنہیں میرے بارے میں جو…

آسودہ چہروں کے پیچھے اک رنج و الم کی دنیا ہے | دنیا کی بے ثباتی پر اشعار

آسودہ چہروں کے پیچھے اک رنج و الم کی دنیا ہے  ہنستے ہوئے کہنا پڑتا ہے یہ دنیا غم کی دنیا ہے آزاد دماغوں کو دنیا داری کی قید سے کیا لینا آزاد دماغوں میں اب بھی ٹکے سے کم کی دنیا ہے سب دوڑ رہے ہیں دنیا میں کچھ…

بدن سلگتا ہے تپتی جبین ہوتی ہے|بدن پر اشعار

بدن سلگتا ہے تپتی جبین ہوتی ہے یہ کیفيت مری شب پونے تین ہوتی ہے انھیں فلک پہ کروں دفن گر اجازت ہو ! وہ جن پہ تنگ خدا کی زمین ہوتی ہے جو لڑکی اپنے ہی ساۓ سے شب میں ڈر جاۓ وہ وقت پڑنے پہ دیوارِ چین ہوتی ہے یہ جس حساب سے پٹڑی پہ…

راس آتی نہیں انہیں دنیا جن کی آنکھوں میں ہم اترتے ہیں|اردو انقلابی اشعار

راس آتی نہیں انہیں دنیا جن کی آنکھوں میں ہم اترتے ہیں دل کی مسند سے حضرت واعظ رفتہ رفتہ صنم اترتے ہیں ذہن پر جو سوار ہو جائیں شعر سینوں میں کم اترتے ہیں سہم جاتا ہے جنگ کا میداں جب بھی اہل قلم اترتے ہیں شام ہوتے ہی میرے آنگن…

دل کے خاک آلود کپڑے پر نکھار آنے لگا |اردو غزلیہ شاعری

دل کے خاک آلود کپڑے پر نکھار آنے لگا تھوڑا‌ تھوڑا اب تمہارا اعتبار آنے لگا کچھ دنوں سےاس کو شاید ہم سمجھ آنےلگے کچھ دنوں سے سنگ کو شیشے پہ پیار آنےلگا کون ہے جو بُت بنا دیتا ہے مجھ ذی روح کو کون ہے جو مجھ میں اب بے اختیار آنے لگا…

عجب گھٹن تھی وہاں پر لہٰذا نکلے اور| اردو شاعری

عجب گھٹن تھی وہاں پر لہٰذا نکلے اور تمام رات تلاشے پھر اپنے جیسے اور تمھارے دل کی طرف اور رستے جاتے تھے کسی نے ہم کو مہیا کیے تھے نقشے اور پراۓ دیس میں اے دل کہاں سے لاؤں وہ ماں جو ماتھا چوم کے کہتی ہے اور کھا لے اور ہم ایسے تنگ…

محبتوں کا حسیں زمانہ ضرور آئے گا دیکھ لینا |اردو انقلابی شاعری

محبتوں کا حسیں زمانہ ضرور آئے گا دیکھ لینا وفا کا پرچم لئے دیوانہ ضرور آئے گا دیکھ لینا سمیٹ کر اپنے سارے جذبوں کو چپ ہوں لیکن مجھے یقیں ہے کتاب جگ میں میرا فسانہ ضرور آئے گا دیکھ لینا گھٹن زدہ اس معاشرے سے کوئی نکل کر زباں پہ اپنے…

زندہ رہنا نہیں ہے مرنا ہے مجھ کو اک عہد سے مکرنا ہے|غزلیہ اردو شاعری

زندہ رہنا نہیں ہے مرنا ہے مجھ کو اک عہد سے مکرنا ہے اک تعلق بنے گا اور مجھے عمر بھر حادثوں سے ڈرنا ہے پھر ان آنکھوں پہ پڑ گئی نظریں میں نے سوچا تو تھا سدھرنا ہے اس نے لڑنا ہے بعد میں مجھ سے پہلے جی بھر کے پیار کرنا ہے تُو نے…

ڈال دے وہ مہرباں کب زندگی کشکول میں | کشکول پر اشعار

ڈال دے وہ مہرباں کب زندگی کشکول میں کاسہءِ امید رکھنا ہر گھڑی کشکول میں لوٹتے ہیں گھر کو جب حالات کے مارے فقیر بھر کے لاتے ہیں فقط شرمندگی کشکول میں مشعلِ فاقہ کشی گھر میں جلی تو یوں ہوا آ گئی ہمدم سمٹ کر روشنی کشکول میں بھول جاتے…

غموں میں بھی رہِ الفت کے راہی غم نہیں کرتے | غم پر اردو شاعری

غموں میں بھی رہِ الفت کے راہی غم نہیں کرتے خوشی کےجال میں بھی شوقِ منزل کم نہیں کرتے ہماری ہر خوشی کے واسطے جس نے لہو بیچا کم ازکم اُس کی پلکیں جانوربھی نم نہیں کرتے پتا ہےہم کسی کےدل میں رہنےکےنہیں قابل تبھی سجنے سنورنے کا تکلف ہم…